5

مسلم لیگ ن کے برجیس طاہر اثاثہ جات کیس میں نیب کے سامنے پیش:My Tech TV News

Spread the love
مسلم لیگ ن کے برجیس طاہر اثاثہ جات کیس میں نیب کے سامنے پیش:My Tech Tv News
My Tech TV News

نیوز کی رپورٹ کے مطابق قومی احتساب بیورو (نیب) نے منگل کو پاکستان مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے چوہدری محمد برجیس طاہر سے اثاثوں کے معاملے میں پوچھ گچھ

ایم این اے محمد برجیس طاہر نیب آفس لاہور پہنچے

، جہاں تین رکنی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم نے ان سے دو گھنٹے تک پوچھ گچھ کی۔

برجیس طاہر پر 300 ملین روپے کے اثاثے رکھنے کا الزام ہے۔

مسلم لیگ (ن) کے قانون ساز اس وقت لاہور ہائیکورٹ سے ضمانت قبل از گرفتاری پر ہیں۔

اپنی درخواست میں

برجیس طاہر نے کہا تھا کہ نیب نے 2003 میں ان کے خلاف لگائی گئی انکوائری کو پہلے ہی بند کر دیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ نیب نے غیر قانونی طور پر ایک شکایت کو ان کے خلاف تفتیش میں تبدیل کیا

اور ان کی گرفتاری کے خدشات ہیں۔

نیب نے اس سے قبل پارٹی کے صدر شہباز شریف سمیت مسلم لیگ (ن) کے دیگر رہنماؤں کو بھی طلب کیا تھا۔

مزید پڑھیں: نیب نے مسلم لیگ (ن) کے رہنما کے خلاف ‘ثبوتوں کی کمی’ کے بارے میں پوچھ گچھ بند کرنے کا فیصلہ کیا

(قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر (شہباز شریف کو راولپنڈی میٹرو بس کنٹریکٹ سکینڈل میں طلب کیا گیا۔)

نیب کے مطابق راولپنڈی میٹرو کا ٹھیکہ مسلم لیگ (ن) کے رہنما احسن اقبال کے بھائی کو دیا گیا

جس میں پی پی آر اے قوانین کو نظر انداز کیا گیا۔

ٹھیکیدار مصطفی کمال کو بھی نیب نے اسی تاریخ کو طلب کیا ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ اس وقت کا وزیراعلی پنجاب شہباز شریف کی ہدایت پر کمال کو دیا گیا تھا۔

پاکستان

مسلم لیگ ن

شہباز شریف

کیٹاگری میں : URDU

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں