5

Artificial inflation will be controlled soon: Raza Baqir

Spread the love

[ad_1]

فائل فوٹو

اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے گورنر رضا باقر نے کہا ہے کہ پاکستان میں مہنگائی مصنوعی ہے جس پر جلد قابو پالیا جائے گا۔

 اسٹیٹ بینک کے گورنر نے برطانیہ کے شہر مانچسٹر میں صحافیوں کے ساتھ اپنی مختصر مصروفیت کے دوران پاکستان-آئی ایم ایف مذاکرات اور مہنگائی کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ ایکسچینج ریٹ بڑھنے کی وجہ سے اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ ہوا، تیل کی بڑھتی ہوئی قیمتوں نے پاکستان میں مہنگائی کو بھی بڑھایا ہے۔

پاکستان اور آئی ایم ایف مذاکرات کے حوالے سے بات کرتے ہوئے اُن کا کہنا تھا کہ آئی ايم ايف کے ساتھ ڈيل سے متعلق معاملات مثبت سمت ميں چل رہے ہيں، کوئی ايسی ڈيل نہيں کی جائے گی جس سے ملکی معيشت کو نقصان پہنچے اور مذاکرات ختم ہونے کے بعد ڈيل سب کے سامنے آئے گی۔

رضا باقر کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان فیٹف کے حوالے سے بھی مثبت اقدامات کر رہا ہے اور پاکستان کا نام جلد ہی گرے لسٹ سے نکل جائے گا کیونکہ پاکستان نے فیٹف کی تمام شرائط پوری کر دی ہیں۔

فیٹف کا اجلاس

انسدادِ منی لانڈرنگ کے عالمی ادارے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (فیٹف) کا تین روزہ اجلاس 19 تا 21اکتوبر پیرس میں جاری رہے گا جس میں پاکستان کا نام گرے لسٹ میں رکھنے یا نکالنے کا فیصلہ کیا جائے گا۔

اجلاس میں منی لانڈرنگ، ٹیرر فنانسنگ کیخلاف اقدامات میں پیش رفت کا جائزہ لیا جا رہا ہے، فیٹف ٹیم پاکستان کی جانب سے ٹیرر فنانسنگ سمیت اب تک کی کارکردگی اور پاکستان کے زمینی حقائق اور قانون سازی کا جائزہ لے گی۔

آئی ایم ایف کی شرائط

 آئی ایم ایف پروگرام کی بحالی کے لیے مزید ٹیکس لگانے سمیت کئی شرائط پیش کر چکا ہے، جمعہ 8 اکتوبر کو عالمی مالیاتی فنڈ نے پاکستان سے بجلی، انکم ٹیکس، سیلز ٹیکس اور اضافی ریگولیٹری عائد کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

آئی ایم ایف کا مطالبہ تھا کہ حکومت ہر طرح کی سبسڈی ختم کرے یا اُس میں نمایاں کمی کرے،  ایف بی آر ریونیو اکٹھا کرنے کے حوالے سے مزید اقدامات کرے،  پاکستان میں نجکاری کے پروگرام کو تیز کیا جائے اور نقصان میں چلنے والی سرکاری کمپنیوں کی نیلامی کا ٹائم فریم فراہم کیا جائے۔




[ad_2]

Source link

کیٹاگری میں : URDU

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں